96

دوران درس حضرت مولانا سلمان صاحب حسینی روپڑے لیکن…

   ابھی کچھ دیر قبل رضوان اختر ندوی مدنی سے  احقر نے حضرت مولانا سلمان صاحب کے بارے میں مزید انکا موقف جاننے کی کوشیش کی تو پتہ چلا مولانا آج کے ندوہ العلماء میں دوران درس اپنی صفائی پیش کرتے ہوئے اپنے موقف پر جمے رہے دوران لیکچر رو پڑے جیسا کہ موصوف نے بتایا کہ مولانا سلمان صاحب کے بیانات کی روشنی میں انکے موقف کو صحیح سمجھنا بہت بڑی غلطی ھوگی، انکی جادو بیانی سے ہر ایک واقف ہے مگر ملت کے مسائل حل کرنے کا انکا یہ انداز ہرگز ملت کے مفاد میں نہیں ہے، اسلئے کہ کسی بھی اقدام کے لئے انکو اپنے بڑوں کی اجازت لینی چاہئے تھی

مولانا سلمان صاحب کا موقف کتنا غلط ہے اسے سمجھنے کی ضرورت ہے اور اس سے انکو رجوع ھونے کی ضرورت ہے، انکے موقف کی تائید کرنا بھی غیر دانشمندانہ اقدام ہے، انکی قابلیت کا انکار نہیں مگر ان کے جذباتی انداز اور غلط اور بے محل اقدامات کی وجہ سے ملت کا بہت زیادہ نقصان کا سودہ کرڈالا ہے، مسلم پرسنل لاء بورڈ کے ساتھ بےوفائی کا ثبوت انھوں نے خود ہی دیا ہے، اس لئے ملت کے اس مؤقر ادارے کو نقصان پہنچانے کے عوض ان کو ملت کے سامنے جوابدہ ھونا چاہئے۔ اپنی غلطیوں کا اعتراف کرکے ملت کے نقصانات کی بھرپائی کرنی چاہئے۔ کیا اللہ کے گھر سے پیار کرنے والے اسکی زمین کا سودہ کیا کرتے ہیں؟
وائے ناکامي متاع کارواں جاتارہا
کارواں کے دل سے احساس زیاں جاتارہا۔

شاہ نواز عالم

خادم

اسماء پبلک اسکول ڈومریہ

اس پوسٹ پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں